اہم قومی خبریں

سیشن کورٹ کے فیصلے میں سنگین غلطیاں ہیں کل سماعت کریں گے ۔ چیف جسٹس

توشہ خانہ کیس
سپریم کورٹ نےعمران خان کو توشہ خانہ کیس میں سزا سنانےکےٹرائل کورٹ کے فیصلے کو بادی النظر میں غلط قرار دیدیا
1- اسلام آبادہائیکورٹ نےکیس قابلِ سماعت قرار دینے کامعاملہ سوالات مرتب کرکےدوبارہ ٹرائل کورٹ کوبھیجا کیااُن کا فیصلہ کیاگیا؟چیف جسٹس عمرعطاء بندیالعمران خان کےوکلاء عدالت میں پیش نہیں ہوئے توٹرائل کورٹ نےاپنےپہلے فیصلےکو بحال کردیا،وکیل الیکشن کمیشن
ٹرائل کورٹ کاپہلا فیصلہ تو ہائیکورٹ نےکالعدم قرار دیدیاتھا،چیف جسٹس
ٹرائل کورٹ کوجلدی کیاتھی کہ ایک ہی دن میں دو تین بار کیس کال کرکےملزم کوسنے بغیرفیصلہ کردیا؟جسٹس جمال مندوخیلکیا عمران خان کو اپنا دفاع پیش کرنے کا موقع دیا گیا؟چیف جسٹس
گواہوں کی فہرست پیش کی گئی لیکن عدالت نے غیرمتعلقہ قرار دے کر مسترد کر دی، وکیل امجد پرویز
یہ سول مقدمات میں تو ہو سکتا ہے فوجداری مقدمہ میں ممکن نہیں، چیف جسٹس
بادی النظر میں اس کیس کے ٹرائل میں غلطیاں ہیں، چیف جسٹسعمران خان کے پاس فورم موجود ہے انہوں نے ہائیکورٹ میں اپیل دائر کر رکھی ہے، وکیل الیکشن کمیشن
کیا عمران خان اس عدالت میں موجود ہیں؟ آپ کیسی بات کررہے ہیں ایک شخص کو فوجداری مقدمہ میں بغیر سنے سزا سنا کر جیل بھیج دیا گیا،آپ کہہ رہے ہیں فورم موجود ہے،چیف جسٹس بندیال کا اظہارِ برہمیٹرائل کورٹ نےسپریم کورٹ اور اسلام آبادہائیکورٹ کےفیصلوں کی خلاف ورزی کی ہے،جسٹس مظاہرعلی اکبر نقوی
ٹرائل پربہت سنجیدہ سوالات کھڑےہو گئےہیں جن پر سپریم کورٹ کی

Consideration

ضروری ہے،چیف جسٹس
فیصلےکاپہلا حق ہائیکورٹ کاہےاس لئے ابھی مداخلت نہیں کر رہے،کل 2 بجے سماعت کرینگے،چیف جسٹس

رضوان احمد

Freelance journalist Twitter account https://twitter.com/real_kumrati?s=09

اپنے خیالات کا اظہار کریں