واقعہ مینار پاکستان کا ڈراپ سین اصل مجرم کون نکلا مکمل تفصیل جانئیے

ڈراپ سین
ریمبو ساتھیوں سمیت گرفتار
سب کچھ پری پلینڈ تھا!
سب گندا ہے پر دھندا ہے یہ!

گریٹر اقبال پارک ہراسگی واقعہ، ٹک ٹاکر عائشہ اکرم کا ساتھی ریمبو گرفتار کر لیا گیا
لاہور پولیس نے ملزم سمیت 8 مزید افراد کو بھی گرفتار کر لیا، متاثرہ خاتون کی درخواست کے بعد کاروائی عمل میں لائی گئی۔

لاہور( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 08 اکتوبر 2021ء ) گریٹر اقبال پارک ہراسگی واقعہ، ٹک ٹاکر عائشہ اکرم کا ساتھی ریمبو گرفتار کر لیا گیا، لاہور پولیس نے ملزم سمیت 8 مزید افراد کو گرفتار کر لیا، متاثرہ خاتون کی درخواست کے بعد کاروائی عمل میں لائی گئی۔ تفصیلات کے مطابق گریٹر اقبال پارک ہراسگی کیس میں اہم پیش رفت ہوئی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق پنجاب پولیس متاثرہ خاتون عائشہ اکرم کے ساتھی ریمبو کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئی۔

ریمبو سمیت کل 8 افراد کی گرفتاری کی تصدیق کی گئی ہے۔ حراست میں لیے گئے تمام ملزمان کی تفتیش سی آئی اے پولیس کے سپرد کر دی گئی، ملزمان کو تھانہ لاری اڈہ سے سی آئی منتقل کر دیا گیا۔ اس سے قبل عائشہ اکرم نے انوسٹی گیشن پولیس کو تحریری بیان جمع کروایا تھا جس میں موقف اختیار کیا گیا کہ گریٹر اقبال پارک جانے کا منصوبہ ریمبو نے ہی بنایا تھا ۔
ریمبو نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ میری نازیبا ویڈیوز بنارکھی ہیں ۔ ویڈیوز کی وجہ سے ریمبو مجھے بلیک میل کرتا رہا ۔ ریمبو مجھے بلیک میل کرکے 10لاکھ روپے لے چکا ہے ، میں اپنی تنخواہ میں سے آدھے پیسے ریمبو کو دیتی تھی ۔ ریمبو اپنے ساتھی بادشاہ کے ساتھ مل کر ٹک ٹاک گینگ چلاتا ہے ۔ واضح رہے کہ گریٹر اقبال پارک ہراسگی واقعہ میں ملوث کئی افراد پہلے سے ہی گرفتار کیے جا چکے ہیں۔

کچھ روز قبل لاہور کی مقامی عدالت نے ٹک ٹاکر خاتون عائشہ اکرم کو ہراساں کرنے کے الزام میں گرفتار چھ ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع کر دی تھی۔ واضح رہے کہ گریٹر اقبال پارک ہراسگی واقعہ 14 اگست کو پیش آیا تھا، جب پارک میں موجود سینکڑوں افراد نے ٹک ٹاکر عائشہ اکرم کو بدترین جنسی ہراسگی کا نشانہ بنا ڈالا تھا، سرعام متاثرہ خاتون کے کپڑے تک پھاڑ دیے گئے تھے۔ بعد ازاں پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے ہراسگی واقعے میں ملوث درجنوں افراد کو حراست میں لے لیا تھا۔
ساجد عثمانی
‏@sajidusmani01

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: