فوجداری قوانین میں ترمین چند اہم نکات

‏موجودہ حکومت کا عظیم کارنامہ

وزارت قانون نے فوجداری قوانین میں 750 سے زائد ترامیم کا مسودہ وزیراعظم سے منظور کروالیاہے. جسے اب پارلیمنٹ میں منظوری کیلئے پیش کیا جائے گا. جون 2022 سے یہ قوانین لاگو کرنیکا پلان ہے. کچھ اہم درج ذیل ہیں.

ایس ایچ او کم از کم گریجویٹ ہوگا.‏

شہری خط کے ذریعے ایف آئی آر درج کروا سکےگا.

تمام تھانوں کا بجٹ مختص کیا جائےگا. ہر تھانے میں اکاؤنٹنٹ بھی مقرر کیا جائے گا.

آڈیو ویڈیو کو بطور گواہی پیش کیا جاسکےگا.

جج مقدمے کو 9 ماہ میں نمٹانے کا پابند ہوگا ورنہ کاروائی ہوگی.

کیس کی سماعت 3 دن سے زائد ملتوی نہیں ہوگی.‏7. 5 سال تک کی سزا کا مجرم پلی بارگین کرسکے گا. معاملات طے پاگئے تو سزا 6 ماہ کردی جائے گی

کاروکاری قابل سزا جرم جبکہ وڈیرہ شاہی پر بھی سزا ہوگی.

یاد رہے تمام قسم کے جرائم کو فوجداری مقدمات کہا جاتاہے.

امید ہے پاکستان میں قانون کی بالادستی میں اضافہ ہوگا.

True Journalizm

Coloumnist | Blogger | Space Science Lover | IR Analyst | Social Servant Follow on twitter www.twitter.com/truejournalizm MSc Mass Communication

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: