میری شہہ رگ سلگتی ہے میرا کشمیر جلتا ہے

یوم کشمیر

میں بولوں کس طرح سے امن کی بھاشا
مرا دشمن ہمیشہ سے مجھے نفرت سکھاتا ہے
مری شہ رگ سلگتی ہے
مرا کشمیر جلتا ہے


توقع امن کی رکھوں بھلا کیسے؟
کہوں میں کس طرح سے دوست بھارت کو
جو قاتل ہے ہزاروں بے گناہوں کا
بھلا معصوم بچوں پر کوئی گولی چلاتا ہے؟
مری شہہ رگ سلگتی ہے
مرا کشمیر جلتا ہے


کلا، فن، آرٹ سب تم کو مبارک ہو
مجھے تو جوہری طاقت بڑھانی ہے
مجھے غوری بنانا ہے، مجھے شاہیں بنانا ہے
مری شہہ رگ سلگتی ہے
مرا کشمیر جلتا ہے۔۔۔

Jabbli Views
فالو کریں

Jabbli Views

جبلی ویوز ایک میگزین ویب سائٹ ہے، یہ ایک ایسا ادارہ ہے جس کا مضمون نگاری اور کالم نگاری کو فروغ دینا اور اس شعبے سے منسلک ہونے والے نئے چہروں کو ایک پلیٹ فارم مہیا کرنا ہے،تاکہ وہ اپنے ہنر کو نکھار سکیں اور اپنے خیالات دوسروں تک پہنچا سکیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: