جب ایران میں رجیم چینج آپریشن ہوا!! آپریشن ایجکس کیا ہے جانئیے۔

‏آپریشن ایجکس کیا تھا..؟

برطانیہ ایران کے 50 فیصد تیل کے شئیرز کا مالک تھا. 1946 میں ڈاکٹر مصدق نے ملکیتی حقوق واپس لینے کی تحریک شروع کی جو 1951 میں عوامی حمایت کی بنا پر کامیاب ہوگئی.

مصدق کو ہیرو کا درجہ مل گیا اور صلے میں وزارت اعظمی. 1953 میں برطانیہ نے مصدق کے خلاف سازش ‏شروع کی. کیمونزم کا حامی بتا کر امریکہ کو بھی ساتھ ملالیا. شاہ ایران رضا پہلوی بھی پیش پیش تھا. اگست 53 میں مصدق کو عہدے سے معزول کرکے تہران سے 100 کلومیٹر دور ایک خفیہ جگہ نظر بند کردیا گیا.

اس سارے عمل کو امریکی سی آئی اے نے آپریشن ایجکس کا نام دیا. ڈی کلاسیفائی ڈاکومنٹ کے ‏مطابق آپریشن کی کامیابی پر برطانیہ کو 50 فیصد ملکیتی حقوق واپس مل گئے. ڈاکٹر مصدق 1967 میں کینسر کا شکار ہوکر انتقال کرگئے.

لیکن ایرانی عوام نے اس سارے معاملے کو قومی غیرت کا معاملہ سمجھتے ہوئے انقلاب کی تحریک شروع کی جو 1979 میں کامیاب ہوئی. ہیلری کلنٹن کہتی ہے کہ اگر امریکہ ‏آپریشن ایجکس میں برطانیہ کا ساتھ نہ دیتا تو ایران امریکہ کے ہاتھ سے کبھی نہ نکلتا اور نہ ہی اتنی ترقی کرپاتا کہ عالمی طاقتوں کو للکار سکے.

True Journalizm

Coloumnist | Blogger | Space Science Lover | IR Analyst | Social Servant Follow on twitter www.twitter.com/truejournalizm MSc Mass Communication

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: