گولی لگنے کے بعد عمران خان کا پہلا خطاب اچھے اچھوں کے پول کھول دئیے

حملے کے بعد عمران خان کا پہلا خطاب
تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم عمران خان کل ایک حملے زخمی ہوئے تھے جس کے بعد انہیں شوکت خانم ہسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں کامیاب آپریشن کے بعد عمران خان قوم سے مخاطب ہوئے ۔ انہوں نے اپنے خطاب میں کہا انہی پہلے سے علم تھا کل یا آج ان پر حملہ ہونے والا ہے میں سوچ رہا تھا کہ کیا واقعی یہ کام کریں گے کیا واقعی یہ چھوٹے چھوٹے مفادات کیلئے ملک کو نقصان پہنچائیں گے ؟ زاداری اور نواز شریف نے ملک کو ناقابلِ یقین نقصان پہنچایا اسحاق ڈار نے اقرار کیا تھا کہ وہ شریف فیملی کیلئے منی لانڈرنگ کرتا ہے یہ مجھے ان جیسا قرار دینے کیلئے مجھ پر جھوٹے کیسز بنوائے گئے لیکن عوام میں شعور آچکا ہے آپ عوام کو زیادہ دیر تک بے وقوف نہیں بناسکتے عوام میں شعور آ چکا ہے یہ سمجھ گئے کہ مجھے نکالنے کے بعد ہمیشہ کی طرح مٹھائیاں تقسیم کیں جائیں گی لیکن عوام نے ردعمل دیا مجھے خود یقین نہیں ہورہا تھا کہ عوام ایسا ری ایکٹ کرے گی
چیف جسٹس صاحب ملک میں انصاف نہیں ہورہا ملک کو انارکی کی طرف لیجایا جا رہا ہے قیامت کے دن آپ سے سوال ہوگا کہ ایسی حالات میں آپ کی کوئی زمہ داری نہیں ؟ ملک کی سب سے بڑی جماعت کے سربراہ کو انصاف نہیں مل رہا اعظم سواتی اور شہباز گل کے ساتھ ناروا سلوک کیا گیا ارشد شریف کو شہید کیا گیا شریف فیملی کے کیسز سے جڑے چھ افراد کے اچانک وفات کی کوئی تحقیقات نہیں ہوئیں چار لوگوں نے بند کمرے میں میرےقتل کی سازش کی میرے قتل کے بعد مذھبی رنگ دینے کی سازش کی مجھے اندر سے لوگ بتاتے ہیں کہ کیا سازش ہوئی کیونکہ وہ اس کے خلاف ہیں جو ملک کے ساتھ ہورہا ہے جنرل باجوہ صاحب جاگ جائیں کیا ادارے میں موجود سازشیوں کو سزاء دینے سے ادارے کے وقار میں کمی ہوگی یا اضافہ ہوگا؟ ‏جنرل باجوہ صاحب ،ہم انسان ہیں، جانوروں کی طرح ٹریٹ نہ کریں،
عوام کھڑے ہو چکے ہیں،
وہ چوروں کو قبول نہیں کریں گے،
میں نے پچھلے چھ ماہ میں قوم کو جاگتے ہوئے دیکھا ہے
شعور کا جن بوتل سے نکل چکا ہے،
فیصلہ کر لیں کہ پر امن انقلاب لانا ہے یا خونی؟
ملک میں ایران جیسے حالات پیدا کرنے ہیں یا سری لنکا جیسے؟
آخر میں مزکورہ تین شخصیات کے استعفی تک احتجاج جاری رکھنے کی ہدایت کی

واضح رہے ہم نے اختصار کے ساتھ نقل کرنے کی کوشش کی ہے
سوشل میڈیا کی سائٹس پر لاکھوں افراد نے عمران خان کا خطاب لائیو سنا

رضوان احمد

Freelance journalist Twitter account https://twitter.com/real_kumrati?s=09

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: